پاکستان

یہ میری ہی آواز ہے، مصطفیٰ کمال کی آڈیو لیک کی تصدیق

مصطفیٰ کمال کا بڑا دعویٰ

Web Desk

یہ میری ہی آواز ہے، مصطفیٰ کمال کی آڈیو لیک کی تصدیق

مصطفیٰ کمال کا بڑا دعویٰ

پاک سرزمین کے چیئرمین مصطفیٰ کمال نے اپنی وائرل آڈیو کو حقیقی قرار دیتے ہوئے اعتراف کرلیا کہ یہ میری ہی آواز ہے۔

 آڈیو وائرل ہونے کے بعد مصطیٰ کمال نے ایک ویڈیو پیغام جاری کرتے ہوئے آڈیو سے متعلق مکمل تفصیلات سے آگاہ کیا۔

اپنے ویڈیو بیان میں وضاحت کرتے ہوئے مصطفیٰ کمال نے بتایا کہ عام انتخابات کے بعد سے میں ایم کیو ایم کی مذاکراتی کمیٹی کا حصہ ہوں، مسلم لیگ ن سے اسلام آباد میں ہماری متعدد میٹنگز ہوئیں، وائرل آڈیو سے متعلق بتایا کہ ایک میٹنگ کے بعد گزشتہ اتوار کو رابطہ کمیٹی کے آفس میں ان کو بریف کر رہا ہوں کہ مذکورہ میٹنگ میں کیا باتیں ہوئیں۔

مصطفیٰ کمال نے بتایا کہ بریفنگ میں بتا رہا ہوں کہ پی ایم ایل این کے دوستوں سے جب ہم نے یہ بات پوچھی کہ آپ کی پیپلزپارٹی کیساتھ میٹنگ کیسی رہی تو پی ایم ایل این کے دوستوں نے ہمیں بتایا کہ پیپلزپارٹی کہہ رہی ہے کہ پی ایم ایل این (مسلم لیگ ن) اور پیپلزپارٹی کے ملنے کے بعد ایم کیو ایم کی ضرورت نہیں ہے، یہی بات رابطہ کمیٹی کو بریف کر رہا تھا ہوں کہ وہ یہ کہہ رہے ہیں کہ ہمارے نمبر پورے ہیں۔

انہوں نے اپنی آڈیو سے متعلق مزید کہا کہ دوسری بات میں یہ بتا رہا ہوں کہ پیپلزپارٹی نون لیگ والوں کو کہہ رہی ہے کہ ایم کیو ایم کا مینڈیٹ جعلی ہے، مصطفیٰ کمال نے وضاحت کرتے ہوئے کہا سب کو پتہ ہے پیپلزپارٹی یہ بات سب کے سامنے ٹی وی پر کہہ رہی ہے، ہم بھی ان کو کہہ رہے ہیں کہ ان کا بھی مینڈیٹ جعلی ہے۔

اس وضاحت کے بعد مصطفیٰ کمال نے اپنی آڈیو لیک سے متعلق دعویٰ کرتے ہوئے کہا کہ یہ میٹنگ رابطہ کمیٹی کے کمرے میں ہو رہی ہے، وہاں کوئی میری وائس ریکارڈنگ کر رہا ہے، انہوں نے کہا کہ بہت دنوں سے ہمیں یہ اطلاعات تھی کہ ہمارے رینکس اینڈ فائل میں ایم کیو ایم لندن کے لوگ بیٹھے ہوئے ہیں اور وہ ان کے لیے کام کر رہے ہیں، ہمیں پتہ نہیں چل پا رہا تھا، کچھ لوگوں پر شک تھا لیکن ہم کنفرم نہیں ہو پا رہے تھے۔

انہوں نے بتایا کہ اس آڈیو کا فارنزک کرانے پر پتہ چل گیا کہ کون ہے جو رابطہ کمیٹی میں بیٹھ کر ایم کیو ایم لندن کیلئے کام کر رہا ہے، کیونکہ یہ آڈیو ایم کیو ایم لندن نے ریلیز کی ہے وہ سمجھ رہے تھے کہ بہت بڑی چیز ان کے ہاتھ لگ گئی ہے، بقول مصطفیٰ کمال آڈیو میں سامنے آنی والی گفتگو عام تھی اس میں کوئی راز نہیں ہے۔

انہوں نے کہا کہ ایم کیو ایم لندن کو یہ اندازہ نہیں ہے کہ اس آڈیو کے ذریعے رابطہ کمیٹی میں بیٹھا ان کا ایک ایجنٹ، گھس بیٹھیا پکڑا کیا ہے، کیونکہ اس آڈیو لیک کے ذریعے ہمیں اس شخصیت کا پتہ چل گیا ہے۔

تازہ ترین