پاکستان

ڈکیتیوں، بدامنی کیخلاف فنکاروں کا انوکھا احتجاج

لوٹ مار کی وارداتوں سے شہریوں کے علاوہ فنکار بھی محفوظ نہیں۔

Web Desk

ڈکیتیوں، بدامنی کیخلاف فنکاروں کا انوکھا احتجاج

لوٹ مار کی وارداتوں سے شہریوں کے علاوہ فنکار بھی محفوظ نہیں۔

صوبہ سندھ کے شہر لاڑکانہ میں بڑھتی ہوئی بدامنی اورفنکاروں سے ڈکیتی کے خلاف سنگیت کار ایسوسی ایشن کی جانب سے انوکھا احتجاج کیا گیا۔

ملک کا شاید  ہی کوئی علاقہ ایسا جہاں کے رہائشی راہزنی اورلوٹ مار سے محفوظ ہوں۔

آئے روز ڈکیتیوں کی وارداتوں میں شہریوں کی قیمتی اشیا چھننے کے ساتھ ان کی ہلاکتوں کی دل دہلانے والی خبریں بھی سنائی دیتی ہیں۔

ان ڈکیتیوں اور چوریوں نے فنکار برادری بھی محفوظ نہیں جس کے خلاف انہوں نے اپنے فن کا مظاہرہ کرتے ہوئے احتجاج ریکارڈ کرایا۔

فنکاروں نے لاڑکانہ میں پریس کلب کے باہر سندھی زبان میں دکھ بھرا گانا گا کر پولیس کے خلاف احتجاج ریکارڈ کروایا گیا۔

مظاہرین نے بتایا کہ ڈاکوؤں نے دو علیحدہ وارداتوں میں 2 فنکاروں سے موٹر سائیکلیں، موبائل فون، نقدی سمیت گانے بجانے کا سامان لوٹ لیا تھا۔

مظاہرین کے مطابق لاڑکانہ شہر میں مراد واہن اور دھامرا کے علاقوں سے فنکاروں کو لوٹا گیا لیکن پولیس تاحال ملزمان کو گرفتار نہیں کرسکی۔

احتجاج کرنے والوں کا کہنا تھا کہ لاڑکانہ پولیس کی نااہلی کے باعث بدامنی میں روز بروز اضافہ ہورہا ہے لیکن پولیس کچھ کرنے کو تیار نہیں۔

انہوں نے مطالبہ کیا کہ فنکاروں کا فوری طور پر لوٹا ہوا سامان واپس لوٹانے سمیت انہیں تحفظ فراہم کیا جائے۔

تازہ ترین