اسکینڈلز

جب جمنائی نے پوری انڈسٹری کے سامنے ریکھا کو اپنی بیٹی تسلیم کیا

یہ میری زندگی کا سب سے زیادہ فخر کا لمحہ ہے کہ میں والد کے ساتھ موجود ہوں

Web Desk

جب جمنائی نے پوری انڈسٹری کے سامنے ریکھا کو اپنی بیٹی تسلیم کیا

یہ میری زندگی کا سب سے زیادہ فخر کا لمحہ ہے کہ میں والد کے ساتھ موجود ہوں

جب جمنائی  نے  پوری انڈسٹری کے سامنے ریکھا کو اپنی بیٹی تسلیم کیا

سینئر بھارتی اداکارہ ریکھا کا زندگی میں جس کے ساتھ، جو بھی رشتہ یا تعلق رہا، اس سے انہیں کوئی مستقل خوشی نہیں ملی اور نہ ہی اس تعلق کا انجام بخیر ہوا۔

 ماں، باپ، بہنیں اور ان کی زندگی میں آنے والے دیگر افراد، سب سے ان کے تعلق میں دُکھ، صدمہ اور اَذیّت غالب رہی۔

ریکھا کی والدہ پشپاولی خاصی طویل علالت کے بعد 1991ء میں مدراس میں انتقال کرگئی تھیں۔

 ریکھا نے زندگی میں بہت نشیب و فراز دیکھے تھے لیکن ہر مشکل گھڑی میں انہوں نے والدہ کو اپنے شانہ بہ شانہ کھڑے پایا تھا۔ 

پشپاولی نے اپنی بیٹی کو فلمی دُنیا میں کامیاب بنانے کے لیے محنت بھی بہت کی تھی پر جب وہ بیمار رہنے لگیں تو مدراس واپس چلی گئی تھیں اور آخرکار وہیں ان کا انتقال ہوا۔

 ان کے انتقال کے بعد ریکھا نے اپنے آپ کو بہت زیادہ تنہا محسوس کرنا شروع کر دیان والدہ سے ان کی وابستگی کا اندازہ اس بات سے لگایا جا سکتا ہے کہ انہوں نے اپنے بنگلے کا نام ’پشپاولی‘ رکھا تھا۔

ریکھا کی ماں کو ریکھا کے باپ جمنائی گنیشان نے اس کے مرتے دم تک اپنی قانونی بیوی نہیں بنایا تھا۔

 تاہم 1994ء میں جب ’فلم فیئر‘ والوں نے جمنائی کو لائف ٹائم اچیومنٹ ایوارڈ دینے کا فیصلہ کیا تو انہوں نے ریکھا کو دعوت دی کہ وہ اپنے ہاتھوں سے اپنے والد کو یہ ایوارڈ پیش کریں اور ریکھا نے یہ دعوت قبول کرلی۔

 ایوارڈ کی یہ تقریب مدراس میں منعقد ہوئی، حاضرین کے ایک بہت بڑے مجمع کے سامنے اسٹیج پر آکر ریکھا نے اپنے والد کے پاؤں چھوئے اور انہیں ایوارڈ پیش کیا۔

جمنائی نے اس موقع پر کہا کہ انہیں اپنی ’پیاری بچی‘ کے ہاتھوں سے ایوارڈ وصول کرکے بہت خوشی ہوئی ہے۔ 

ریکھا نے اپنی ساری عمر باپ کے سائے اور سرپرستی کے بغیر گزار دی تھی، جمنائی نے کبھی پشپاولی کو اپنی بیوی اور ریکھا کو اپنی بیٹی تسلیم نہیں کیا تھا، یہ احساس ایک زخم کی طرح ہمیشہ ریکھا کے دل میں موجود رہا تھا۔

 اس کے باوجود ایوارڈ کی تقریب کے دن ریکھا خوش نظر آرہی تھیں۔

 انہوں نے جمنائی کو ایوارڈ پیش کرنے سے قبل مائیک پر کہا کہ ’یہ میری زندگی کا سب سے زیادہ فخر کا لمحہ ہے کہ میں اسٹیج پر اپنے والد کے ساتھ موجود ہوں اور انہیں ایوارڈ پیش کررہی ہوں۔‘

آخر کار جمنائی نے اسٹیج پر پوری فلم انڈسٹری کے سامنے ریکھا کو پہلی بار اپنی بیٹی تسلیم کرلیا تھا لیکن پشپاولی یہ دن دیکھنے کے لیے اور یہ الفاظ سننے کے لیے دنیا میں موجود نہیں تھیں۔

تازہ ترین