پاکستان

عمران ریاض نے حج کیلئے روانگی سے قبل سنسنی خیز بیان دیدیا

عمران ریاض نے کہا مجھے روکنے کی ایک اور کوشش کی جاسکتی ہے۔

Web Desk

عمران ریاض نے حج کیلئے روانگی سے قبل سنسنی خیز بیان دیدیا

عمران ریاض نے کہا مجھے روکنے کی ایک اور کوشش کی جاسکتی ہے۔

(فائل فوٹو: سوشل میڈیا)
(فائل فوٹو: سوشل میڈیا)

معروف یوٹیوبر عمران ریاض نے حج کے لیے روانگی سے قبل بیان جاری کرتے ہوئے کہا ہے کہ مجھ حج پر جانے سے روکنے کے لیے گرفتار کرنا چاہتے ہیں تو تیار ہوں۔

عمران ریاض نے اپنے آفیشل 'ایکس' اکاؤنٹ پر ایک پوسٹ میں کہا کہ 'اطلاعات مل رہی ہیں کہ ائیر پورٹ پر غیرمعمولی نفری ہے، مجھے روکنے کی ایک اور کوشش کی جا سکتی ہے'۔

(اسکرین شاٹ: ایکس)
(اسکرین شاٹ: ایکس)

انہوں نے کہا کہ 'میرے اللہ گواہ رہنا کہ میں نے اپنی ہر ممکن کوشش کی، میں ائیرپورٹ کی طرف جارہا ہوں، مجھے حج سے روکنے کے لیے گرفتار کرنا چاہتے ہیں تو بھی میں تیار ہوں حالانکہ میں تمام کیسز میں ضمانت پر ہوں، کسی کیس میں مطلوب نہیں ہوں'۔

عمران ریاض نے مزید لکھا کہ 'جب جب کسی عدالت نے مجھے طلب کیا، میں پیش ہوا، کیسز کا سامنا کیا، نہ کبھی بھاگا، نہ مفرور ہوا اور نہ ہی اشتہاری ہوں، احرام پہن کر اپنی حج فلائٹ کے لیے ائیر پورٹ جارہا ہوں'۔

یاد رہے کہ میڈیا رپورٹس کے مطابق چیف جسٹس اسلام آباد ہائیکورٹ جسٹس عامر فاروق نے عمران ریاض کی حج کے لیے جانے کی اجازت سے متعلق درخواست پر 29 مئی کو سماعت کی تھی اور اُن کو حج پر جانے کی اجازت دی تھی۔

تاہم 3 جون کو عمران ریاض کو عدالت سے اجازت ملنے کے باوجود حج کی ادائیگی کے لیے سعودی عرب کا سفر کرنے سے روک دیا گیا تھا۔

اجازت نہ ملنے پر عمران ریاض ائیر پورٹ سے واپس گھر روانہ ہوگئے، اُن کا کہنا تھا کہ وہ حج پر جانے کی اجازت کے لیے دوبارہ عدالت سے رجوع کریں گے، بعدازاں آج اسلام آباد ہائیکورٹ نے عمران ریاض کو حج پر جانے کی اجازت دے دی تھی۔

تازہ ترین